Skip to main content

Posts

Showing posts with the label knowledge

Salam Aqeedat

 Salaam Aqeedat مرے کلام پہ حمد و ثناء کا سایہ ہے  مرے کریم کے لطف و عطاء کا سایہ ہے میں حمد و منقبت و نعت لکھ رہا ہوں،  میرے تخیلات شاه ھدی کا سایہ ہے لکھا ہے حسن جہاں، اُس کو پڑھ چکا ہوں  حسن کیں پہ خامس آل عبا کا سایہ ہے خدا نے ہم کو نوازا حواس خمسہ سے  یہ ہم پہ پنجتن با صفا کا سایہ ہے کوئی مریض ہو لے جا رضا کے روضے پر  وہیں طبیب ہے، دار الشفاء کا سایہ ہے سفر ہو یا ہو حضر مجھ کو کوئی خوف نہیں  کہ مجھ پہ شاہ نجف مرتضی کا سایہ ہے علی امام مرا، اور میں غلام علی  علی کی شان پر تو لافتی کا سایہ ہے علی کا نام تو حرز بدن ہے اپنے لیے  علی کے اسم پہ رب علی کا سایہ ہے ن لطف احمد مرسل بفضل آل رسول  میں خوش نصیب ہوں مجھ پر ہما کا سایہ ہے وہی ہے نفس پیمبر وہی ہے زوج بتول  علی کی ذات پر ہی ہل اتی کا سایہ ہے ریاض خلد کے سردار شبر و شبیر  حدیث پاک ہے، خیر الوریٰ کا سایہ ہے سفیر کرب و بلا، زینب حزیں پہ سلام  وہ جس کے عزم پہ خیر النسا " کا سایہ ہے تری دعا کی اجابت میں دیر کیا ہو گی  علی کا نام لے! حاجت روا کا سایہ ہے نجات پائے گا ہر دکھ سے تو نہ رہ ناشاد  کہ تجھ پہ رحمت ارض و سماء کا سایہ ہے mar

Naat Rasool Maqbool

 Naat Rasool Maqbool دل میں ترا خیال، تو لب پر سلام ہے  میرا یہی وظیفہ ہے جو صبح و شام ہے  یسین کہہ دیا کبھی طہ بتا دیا  رب کی زباں سے کتنا حسیں تیرا نام ہے  تجھ کو خدا نے عرش پر مہماں بنا دیا  کون و مکان میں تو ہی تو عالی مقام ہے  زیبا زبان حق سے ہے توصیف مصطفی  قرآن تمام وصف رسول انام ہے ہے  جس کے دل میں عشق خدا، حب اہلبیت  اس گل بدن پہ آتش دوزخ حرام ہے  شمس و قمر نے نور لیا ہے حضور سے  نور خدا کا جلوہ ز رویش مدام ہے اسلام کا اصول ہے امن و سلامتی  امت پہ کی رسول نے حجت تمام ہے  ایک ایسے دور میں ہمیں جینا پڑا ہے اب  نے ہاتھ دل پہ ہے، نہ زباں پر لگام ہے  وابستہ خود کو کیجئے آل رسول سے  یہ وہ عمل ہے جس کے لیے نقد دام ہے  حب رسول ہے مرا سرمایہ حیات  اس کے بغیر جو بھی ہے سرمایہ خام ہے  دونوں جہاں میں دامن احمد کو تھامئیے  ناشاد کی طرف سے یہ زریں پیام ہے اللہ کا بندہ ہوں، گنہگار تو ہوں  احمد کے نواسے کا عزادار تو ہوں  " محشر کا مجھے اس لئے کچھ خوف نہیں  زہرا کی شفاعت کا سزاوار تو ہوں dil mein tra khayaal, to lab par salam hai mera yahi wazifa hai jo subah o shaam hai yaseen keh diya k

New Naat Mustafa

 New Naat Mustafa کسی درجہ با وقار ہے ایوان مصطفی  منصب ہے جبرئیل کا دربان مصطفی اللہ کے حبیب کا حاصل اُنہیں مقام  ختم الرسل کا مرتبہ شایان مصطفى مسلم وہی ہیں جن سے ملے امن و آشتی  یہ ہے حدیث پاک به فرمان مصطفی یسین کہہ دیا کہیں طہ بتا دیا  قرآن ہے گواہ به ایقان مصطفى کفار معترف ہیں کہ ہیں صادق و امین  ما ينطق عن الھوی ہے شان مصطفى ان ہی کی ذات شارع شرع مبین ہے  اسلام ہے کتاب به عنوان مصطفى اُس نے نظام عدل عطا کر دیا ہمیں  انسانیت پر کم نہیں احسان مصطفی اعجاز ہر نبی کا خدا نے انہیں دیا  شمس و قمر ہیں تابع فرمان مصطفی ہیں روز حشر ساقی کوثر تو مرتضی  حق کی طرف سے مالک رضوان مصطفى فرماں روائے جن و بشر فرش خاک پر  عرشِ بریں پہ رب کا ہے مہمان مصطفی حسن و جمال میں وہی یکتائے کائنات  نور خدا ہے صورت تابان مصطفی ممکن نہیں کسی سے ثناء اُن کی ہو تمام  ہے رب ذوالجلال ثناء خوان مصطفى منصب کی اقتدار کی حاجت نہیں مجھے  ہے میرے پاس دولت فیضانِ مصطفی ناشاد کی دعا ہے الہی! محشور کر  غلامان مصطفى kisi darja ba Waqar hai ewaan mustafa mansab hai jibrael ka darbaan mustafa Allah ke habib ka haasil unhen m

urdu new hamad

Urdu New Hamad Rehman to Raheem to aur Zuljilal hai rab kareem to hi jamal o kamaal hai mujh ko Sapas o hamd ki tofeq day sada teri ataa nah ho to meri kya majaal hai taseer di zabaan ko, aankhon ko roshni tairay baghair saans bhi lena mahaal hai kon o makaan, kin se hi peda kiye gaye to maalik yakoon, bulaa qail o qaal hai meri khataon aur gunaaho ko bakhash day to Afoo o dar guzar mein bara be misaal hai hamd kkhuda o naat nabi madah اهلبیت likhta rahon hamesha yeh mera kamaal hai rehmat ho mujh pay rehmat aalam ke wastay dono jahan mein jis se mra Itsaal hai hum na samajh hain, qoum ki kashti bhanwar mein hai hum par tri nigah karam hasb haal hai arz watan se khauf ke baadal utha day ab tairay karam se husn talluq bahaal hai Nashad hum mein koi nahi, saaray shaad hain hum sab ka jab waseela محمدؐ ki all hai رحمان تو رحیم تو اور ذوالجلال ہے  رب کریم تو ہی جمال و کمال ہے مجھ کو سپاس و حمد کی توفیق دے سدا تیری عطا نہ ہو تو مری کیا مجال ہے تاثیر دی زبان کو، آنکھوں کو روشنی تیرے بغیر سان

New Hamd Urdu

 New Hamd Urdu mujhe fakhr –apne naseeb par mujhe Faiz hamd sun-hwa ataa mein hon mutarrif, mein haqeer hon, تراحق mein kaisay karoon ada to hamid hai, to Majeed hai, to lateef hai, to rasheed hai tri hamd kaisay bayan ho, to hi is ki terhan mujhe bta tri bargaah mein hon khara, marey charah gir mujhe bheek day to ghanni hai, to hi Muqeet hai, mein tre hi derka hon ik gadda to Hafeez hai, to ghafoor hai, to hakeem hai, to Raheem hai tri rehmaton ka sawal hai, koi aur reham kere ga kya to Sami hai, to Baseer hai, to khaibar hai, to Aleem hai to hi jaan laita hai raaz dil, koi bhaid tujh se nah choup saka jo mareez hai, jo aleel hain, unhen kya gharz hai tabeb se tra naam sab ke liye dawa, tra zikar sab ke liye Shifa meri lagzishon ka hisaab kya, mein Ghareeq behar gunah hon tri nematon ka shumaar to mein kisi terhan se nah kar saka dar mustafa ko bhi choom lon, tre ghar ka phir se tuwaf ho meri khawahishon ko tamam kar, yahi arzoo hai marey kkhuda ! safeer Adam ko jo mein brhhon, marey

Beautiful Words About Knowledge in English Urdu and Hindi

Beautiful Words About Knowledge in English Urdu and Hindi علم ایک دولت ہے کائنات کی سب سے بڑی دولت علم ہے۔ علم عجائبات قدرت میں سے ہے۔ اس میں ایٹم سے زیادہ قوت و توانائی اور حسن و نور ہے۔ یہ جمالیاتی تخلیقی قوت کا لامتناہی سرچشمہ ہے۔ صریر خامہ اور صور اسرافیل ہے ۔ اس میں تاثیر کن بھی ہے اس کا دم دم جبریل ، اس کا نفس نفس مسیحائی اور اس کی کلام میں موجودگی ، تاثیر برق حسن ہے جو دلوں کو ژندہ اور ظلمتوں کو دور کرتی ہے ۔ بیماروں کو شفا بخشتی ہے اور زندگی کے جادہ مستقیم کو روشن کرتی ہے۔ قلم کو پوری قوت سے تھاما جائے تو اللّٰہ کے بندوں کو خون آشام بشری چنگل سے چھڑایا جا سکتا ہے قلم کافی ہے ارباب قلم کو قلم دان وزارت کی، ہوس کیا تم دولت کی حفاظت کرتے ہو اور علم تمہاری حفاظت کرتا ہے۔ دولت دشمن پیدا کرتی ہے اور علم دوست بناتا ہے ۔ دولت تقسیم کرنے سے کم ہوتی ہے اور علم بانٹنے سے بڑھتا ہے ، دولت مند کنجوس اور علامہ فیاض ہوتا ہے ۔ نیز علم کو چوری چکاری کا خطرہ نہیں ہوتا ہے ۔ دولت جتنی بھی ہو محدود ہوتا ہے اور علم لامحدود ہوتا ہے۔ دولت سے اکثر دل و دماغ پر سیاہی چھا جاتی ہے جبکہ علم دل و دماغ کو روش